پہلےپیارے نبی ﷺ کا یہ فرمان سن لوافطاری میں تربوزکھانے والو

اردو نیوز! 9 بہترین فوائد ہیں۔ تربوز بہت مزیدار اور تازہ دم رکھنے والا پھل ہے جو انسانی جسم کے لیے بے حد مفید تربوز بھی دیگر پھلوں کی طرح اللہ تعالیٰ کی ایک نعمت ہے جو نہ صرف بھوک کو مٹ۔اتا ہے بلکہ پیاس بھی ختم کرتا ہے۔ تربوز کھانے کےہے۔تربوز میں وٹامن اے اور سی کے علاوہ بہت سے صحت مند مرکبات پائے جاتے ہیں جبکہ اس کے ایک کپ میں 46 کیلوریز پائی جاتی ہیں۔تربوز غذائیت سے بھرپور ہوتا ہے

جس میں بہت کم ک۔یلوریز پائی جاتی ہیں۔تربوز میں وٹامن اے، وٹامن سی، پوٹاشیم، میگنیشم، وٹامن بی ون، بی فائیو اور بی 6 پایا جاتا ہے جو انسانی جسم کے لیے انتہائی مفید ہے۔ جو دن بھر ایک انسانی جسم کو متح۔رک رکھتا ہے۔اس میں موجود پوٹاشیم دن بھر کی مصروفیت کے باوجود تھک۔اوٹ کے احساس کو دور کرتا ہے۔ یہ اینٹی آک۔سائیڈنٹ جسم میں گ.ردش کرنے والے مض.ر فری ریڈیک.لز سے ل.ڑتا ہے اور خلیات کا دفاع کرتا ہے۔ان دنوں میں تربوز کو لوگ بڑے شوق سے کھاتے ہیں ۔ یہ ایسا پھل ہے جو عام دستیاب ہے اس کو کھانے سے پیاس کی ش.دت کم ہوجاتی ہے ۔ درحقیقت اس کو دیکھنا بھی آنکھوں کو ٹھنڈک پہنچاتا ہے ۔ آج ہم بتائیں گے کہ تربوز کے کیا فائدے ہیں حدیث پاک ﷺ میں اس بارے میں کیا آیا ہے ۔

حضورﷺ نے اس پھل کے بارے میں کیا ارشاد فرمایا ہے ۔ تربوز نہ صرف گرمیوں میں تازگی پیدا کرتا ہے بلکہ یہ جسم کو وٹامن اے بی سی کیساتھ پوٹاشیم اور کئی فائدے فراہم کرتا ہے عموماً لوگ تربوز کو زبان کا ذائقہ تبدیل کرنے پانی کی کمی دور کرنے اور ہاضمہ کیلئے استعمال کرتے ہیں ماہرین کا کہنا ہے کہ تقریباً نوے فیصد تربوز کے اندر پانی ہوتا ہے ۔جو گرمیوں میں ہائی.ڈریٹ.ڈ رکھنے کیلئے بہت مفید ہے یہ انسانی صحت کیلئے بہترین غذا ہے اس کے اندر ایسے فائدے پائے جاتے ہیں جو نہ صرف گ۔رمی کو دور کرنے اور جگر مثانہ گ۔ردوں اور دل کو طاقت فراہم کرتے اس کو کھانے سے پانی کی کمی دور ہوجاتی ہے اور دل کو تازگی محسوس ہوتی ہے ۔اس کے اث۔رات دماغ تک پہنچتے ہیں جوکہ

دماغ کو تقویت دینے کے ساتھ ساتھ ق۔وت حافظہ کو بھی بڑھاتے ہیں۔ تربوز کا زیادہ استعمال آنکھوں کی بیما۔ریوں کو دو رکرتا ہے آنکھوں کی روشنی کو بہتر کرتا ہے ۔اس کے ساتھ ساتھ پیٹ کی بیماریوں کا خاتمہ کرتا ہے اس میں پانی کی زیادہ مقدار انسانی جسم میں وزن کو بھی کم کرتی ہے ۔ رات ہو یا دن کو تربوز کو کھانے کے بعد اوپر سے پانی نہ پئیں ۔ آپ کوبتاتے ہیں کہ نبی اکرمﷺ نے تربوز کے متعلق کیا ارشاد فرمایا ہے حضرت اما ں عائشہ ؓ سے روایت ہے کہ رسول اکرمﷺ تربوز کو اکثر کھجور کیساتھ ملا کر کھایا کرتے تھے. ساتھ یہ بھی فرماتے تھے کہ ہم کھجور کی گرمی کو تربوز کی ٹھنڈک سے اور تربوز کی ٹھنڈک کو کھجور کی گرمی سے ت۔وڑتے ہیں ۔ آپ بھی سحری اور افطاری میں تربوز کا استعمال کرتے ہیں اس سنت پر ضرور عمل کریں ۔

اللہ تعالیٰ ہم سب کو ہر سنت پر عمل کرنے کی توفیق عطاء فرمائے ۔اللہ تعالی نے انسان کے کھانے پینے کے لیے بے شمار نعمتیں پیدا کی ہیں اور ان میں سے کچھ ایسی ہیں جس میں خوراک اور پانی دونوں کی کمی پوری کرنے کی صلاحیت ہوتی ہے۔ان ہی میں سے ایک ہے تربوزجو ناصرف کھانے میں لذیز ہے بلکہ اس میں موجود اجزا غذائیت سے بھر پور ہوتے ہیں۔ اسے کھانے سے نا صرف پیاسختم ہوتی ہے بلکہ بھوک سے بھی نجات حاصل ہوتی ہے۔ویسے تو اس کے لاتعداد فوائد ہیں تاہم

ان میں سے چند ہم آپ کو بتا رہے ہیں بوز میں فی کپ صرف 46 کیلوریز ہوتیں ہیں لیکن اس میں وٹامن سی، اے اور کئی صحت افزا اجزا موجود ہوتے ہیں جو جسم کے لیے بہت ضروری ہوتے ہیں انی جسم کے لیے سب سے ضروری ہے اور روز کم از کم جسم کو آٹھ کلاس پانی ضرورت ہوتی ہے۔ تربوز پانی کا بہترین متبادل ہے کیونکہ اس میں پانی کی 92 فیصد مقدار موجود ہوتی ہے۔ اسی لیے یہ جسم میں پانی کی کمی دور کرنے میں مددگار ثابت ہوتا ہے۔ گر آپ اپنے زائد وزن سے پریشان ہیں تو تربوز کا استعمال کریں کیونکہ اس میں کیلوریز کی مقدار بہت کم ہوتی ہے جبکہ تربوز میں شامل پانی اور فائبر کی خاص مقدار جسم کو بھرپور غذائی حجم فراہم کرتی ہے اور اس میں کیلوریز کم سے کم ہوتی ہیں ربوز غذائیت سے بھرپور ہوتا ہے،

اس کے ایک کپ میں وٹامن سی، اے، میگنیشیم، پوٹاشیم ، وٹامن بی ون، بی فائیو اور بی سکیس شامل ہوتے ہیں جو جسم کے لیے انتہائی مفید ہیں ربوز میں ایسے اجزا بھی شامل ہوتے ہیں جو انسان کو کینسر جیسے مہلک مرض سے محفوظ رکھنے میں مددگار ثابت ہوتے ہیں۔ ایک تحقیق کے مطابق تربوز میں شامل کوکربیٹناسن ای اور لیوپیین کی مقدار کینسر کےخظرے کو کم کرتی ہے ل جو جسم کا ایک اہم اجزا تصور کیا جاتا ہے، تربوز اس کے لیے بھی بہت مفید ہے۔ اس کا استعمال دل کو بہت سی بیماریوں سے محفوظ رکھتا ہے۔ اس وقت دنیا بھر میں دل کی بیماریاں موت کی ایک بڑی وجہ ہیں لیکن تربوز ایسا پھل ہے جو کولیسٹرول اور بلڈ پریشر کی سطح کو کم کرتا ہے، یہ دل کے دورے کا خطرہ بھی کم کرتا ہے تربوز کا جوس بھی جسم کے لیے بہت مفید ہوتا ہے،

اس میں شامل اجزا جسم کو توانائی فراہم کرتے ہیں۔ تحقیق کے مطابق ورزش کے بعد اس کا استعمال جسم کے لیے مفید ہے ربوز کو گرمی کا توڑ کرنے والا پھل کہا جائے تو بے جا نہ ہوگا، موسم گرما کا یہ خصوصي پھل نہ صرف گرمی بھگانے میں مدد فراہم کرتا ہے، بلکہ یہ ذائقہ دار پھل کئی موزی بیماریوں کو پیدا ہونے سے بھی روکتا ہے۔گرم موسم جیسے ہی اپنا رنگ دکھاتا ہےتو یہ دو رنگی پھل سب کی ضرورت بن جاتا ہے کیونکہ تربوز پانی کی کمی پوری کرنے ميں انتہائی معاون و مددگار ہے۔تربوز کونہار منہ بہت فائدہ مند ہے لیکن اسے کھانے سے پہلے اور بعد میں پانی نہ پئیں کیونکہ اس میں نوے فیصد پانی ہوتا ہے اس لیے اگر ساتھ ہی پانی پی لیا جائے تو اس سے فوڈ پوائزننگ کا خط.رہ رہتا ہے۔

Leave a Comment

error: Content is protected !!