آڑو کھانے کے 20 ناقابل یقین فوائد جنہیں جان کر آج سے ہی اس کا استعمال شروع کردیں گے،مزید جانیں اس آرٹیکل میں

اردو نیوز! یہ پھل چین میں پیدا ہوتا ہے لیکن پوری دنیااس سے لطف اندوز ہوتی ہے۔ آڑو زیادہ تر خاص مواقع پر استعمال ہوتا ہے اس کو مختلف ذائقوں کے لیئے میٹھے کھانوں میں استعمال کیاجاتا ہے اور ایک بنیادی طور پر ذائقہ کے اضافی خوراک کے طور پر مانا جاتا ہے۔ اس کو پہلے ہی صحت کیلئے مکمل خوراک کا درجہ حاصل ہے۔ اس خوبصورت پھل کا فائدہ اْٹھانے کیلئے آپ اس مضمون کو ضرور پڑھیئے۔

عمر اور دوسرے عوامل آپ کی نظر کو نمایاں طور پر متاثر کرسکتے ہیں۔ یہ آنکھوں کو مخصوص غذائی اجزاء فراہم کرنےکے لیئے بہت اہم کردار ادا کرتا ہے۔ تاکہ نقصان دہ عناصر سے بہتر طریقے سے مقابلہ کرسکے۔ اچھی آنکھوں کی شناخت قدرتی اجزاء کے طور پر گاجر کو ترجیحی دی ہے لیکن مضبوط سے مضبوط آنکھوں کیلئے ماہرین نے آڑو کی افادیت کو بھی تسلیم کیا ہے۔ بیٹا کیروٹین کے مجموعہ کے ساتھ جسم کے تمام حصوں میں خون کی گردش کو بڑھانے کے علاوہ آنکھوں کے پٹھوں کی فعالیت کو بہتر بنانے کے قابل بناتا ہے۔آڑو کی اس کم معروف فائدے میں سے بھی زیادہ اہم فائدہ میں سے ایک یہ ہے۔ ہمارے جسم کو روزانہ کی بنیاد پر کئی ایجنٹوں اور زہریلے مادو کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

ان ٹاکسن کا کام گردوں میں اضافی دباؤ ڈالنا اور نظام کو روکنا ہے۔ پوٹاشیئم اور آڑومیں موجود غذائی ریشہ کے ساتھ گردوں کو بہتر کام کرنے کی کمک حاصل ہے۔ماہرین یہ بھی کہتے ہیں کہ آڑو کے غذائی اجزاء دردناک السر کو بڑھنے سے روکتے ہیں۔ اگر آپ اپنے گردوں کی روائتی صفائی کرنا چاہتے ہیں تو آپ کو چاہیئے کہ آپ آڑو کو اپنی روزمرہ کی غذاء میں شامل کرلیں۔یہ مذیدار پھل مدافعاتی نظام کے کام کاج کیلئے ایک بوسٹر کے طور پر کام کرتا ہے جس میں بہت زیادہ مقدار میں وٹامن سی پایا جاتا ہے۔ اصل میں آڑو بھی جلد کی حفاظت کرتا ہے اور ان وجوہات کو روکتا ہے جن سے چہرے کو نقصان پہنچتا ہے۔

آڑو خاص طور پر آنکھوں کے گرد سیاہ حلقے اور جھریوں کے خاتمہ کیلئے بیرونی طور پر خوبصورتی کی دیکھ بھال معمولات کے ایک جز کے طور پر کرتا ہے۔آپ وزن میں کمی یا وزن کو کنٹرول کرنے کے بارے میں فکر مند ہیں ؟ یقیناً آپ کا جواب ہاں میں ہی ہوگا۔ آپ کو چاہیئے کہ آپ روزانہ کھانے کی منصوبہ بندی میں آڑو کو بھی شامل کرلیں۔ ایک آڑو میں اگر کلوریز کو شمار کیا جائے تو یہ ۸۶ کلوریز شمار ہوتی ہے۔کم کلوریز شمار کے علاوہ آڑو میں چربی کی مقدار صفر کے قریب ہے۔ آپ کے ڈائٹ پلان کے لیئے بہتر انتخاب کیا ہے ؟ پھل کے جوڑے کے مقابلے میں کم چربی ، کم کلوریز اور دیگر صحت کے فائدے کے مقابلے میں ایک میزبان کی حیثیت سے آپ کی خوراک کی منصوبہ بندی کیلئے

ایک بہترین انتخاب ہے۔آڑو کے ساتھ بہت بڑا ذخیرہ وٹامن اے، وٹامن سی، وٹامن ای، آئرن، زنک، میگنشیئم اور کیلشیئم کا موجود ہے۔ اس کے علاوہ یہ زہریلے مادوں کا بھی دفاع کرتے ہیں۔ آڑو مکمل طور پر ہمارے جسم کی فلاح کیلئے فائدہ مند مرکباب کی طویل فہرست کے ساتھ حیرت انگیز طور پر کام کرتے ہیں۔آڑو کو اپنی سلاد میں شامل کرسکتے ہیں اور میٹھا بنانے کی ترکیبوں میں بھی اسے استعمال کرسکتے ہیں۔وٹامن سی اور مفید اینٹی آکسیڈنٹ کا بہترین ذریعہ ہونے کے باعث آڑو کینسر کے ان زرات کی تشکیل کو روکتاہے جو کینسر کا سبب بنتے ہیں اعلیٰ فائبر پر مشتمل ہونے کے باعث بڑی آنت کے کینسر سے بچاتاہے۔وہ تمام پھل جو اینٹی آکسیڈنٹ اور وٹامن سی پر مشتمل ہوں اور آپ انھیں انکی قدرتی حالت میں کھائیں تو

یہ پھل جھریاں کم کرکے مجموعی طورپر جلد کی ساخت کو بہتر بنانے اور سورج اور آلودگی کے باعث ہونے والے جلد کے نقصانات سے لڑنے کی صلاحیت رکھتے ہیں وٹامن سی کولیجن کی پیداوار میں مدد فراہم کرتاہے جو آپکی جلد کے نظام میں اہم کردار ادا کرتاہے ۔ٹیکساس اے اور ایم کی جانب سے ایک اور مطالعہ کے مطابق آڑو اور آلو بخارا کا ایکسٹریکٹ چھاتی کے کینسر کے خلیات کی سب سے جارحانہ اقسام کا خاتمہ کرنے میں موثر ہیں اور اس عمل سے عام صحت مند خلیوں کو نقصان بھی نہیں پہنچتاہے۔ایک درمیانہ آڑو دو گرام فائبر مہیا کرتاہے۔ تحقیق کے مطابق ٹائپ ایک ذیابیطس میں اعلیٰ غذائی ریشہ کے باعث خون میں شوگر کی سطح کم ہوتی ہے

اور ٹائپ ٹو ذیابیطس میں بلڈ شوگر میں لیپڈزاور انسولین کی سطح میں بہتری آتی ہے۔آڑو میں موجود فائبر،پوٹاشیم، وٹامن سی ، اور فیٹی ایسڈ موجود ہوتے ہیں جو دل کی صحت برقرار رکھنے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں۔پوٹاشیم کی مقدار میں اضافہ کے ساتھ ساتھ سوڈیم کی مقدار میں کمی جیسی اہم غذائی تبدیلی کسی بھی شخص میں دل کی بیماری کے خطرات کو کم کرسکتی ہے۔مطالعہ سے ثابت ہوا ہے کہ جو افراد ایک دن میں ۴۰۶۹ ملی گرام پوٹاشیم لیتے ہیں تو انمیں ۴۹ فیصد دل کے مرض کے باعث موت کا خطرہ کم ہوتاہے

ان لوگوں کے مقابلے میں جو ایک دن میں ۱۰۰۰ ملی گرام پوٹاشیم لیتے ہیں۔دن میں تقریباً دو سے تین آڑو کھانے سے آنکھوں کی صحت میں اچھی پیش رفت ہوتی ہے اور عمر بڑھنے کی وجہ سے ہونے والے میکیولر ڈیجینیریشن کے خطرے کو کم کرتاہے۔صحت مند جلد ،بالوں، توانائی میں اضافہ اور وزن کم کرنے میں مفید ہے ۔یماری کے باعث ہونے والے موت کے خطرات کو کم کرتاہے۔معدہ اورجگر کے لئے بے حد مفید ہے۔آڑو کی گھٹلی کا روغن بواسیر،کان کے درد اور بہرے پن کے لئے مفید ہے۔ آڑو کے پتوں کا جوشاندہ پینے سے پیٹ کے کیڑے مرجاتے ہیں۔آڑو کے پھول دوماشہ گرم پانی کے ساتھ کھانے سے چند دنوں میں بند حیض جاری ہوجاتاہے۔گرمی کے باعث بھوک نہ لگنے میں بہترین پھل ہے۔

اور پیاس کی شدت کو کم کرتاہے۔گرمی کے بخار میں مریض کو آڑو کھلانے سے مریض کی طبیعت کو فرحت پہنچتی ہے۔آڑو کے بیج میں موجود مغز کو ہرے دھنیے کے ساتھ پیس کر لگانے سے پھنسیاں دو ر ہوجاتی ہیں۔جنھیں زیادہ گرمی لگتی ہے ان لوگوں کے لئے آڑو بہترین پھل ہے۔معدہ کو طاقت دیتاہے اور قبض دور کرتاہے۔منہ کی بو ختم کرتاہے۔اور اسکے مغز کا تیل بالوں کی زیبائش کیلئے مفید ہے۔طبِ یونانی میں آڑو کے پھول کھانسی دور کرنے میں مفیدسمجھے جاتے ہیں۔ آڑو کو جلد کیلئے بھی استعمال کرسکتے ہیں۔اس کا منفرد ذائقہ ، مہک اور ہموار ساخت فوری طور پر آپ کو ترجیحی بنیادوں پر مشورہ دیتے ہیں کہ اس کو اپنی فہرست میں سب سے پہلے شامل کریں

Leave a Comment

error: Content is protected !!