مرغی حلال ہے یا حرام گوشت کی پہچان کیسے کی جائے ؟جانیےچند مفید معلومات اس آرٹیکل میں

اردو نیوز! آج کل مردہ اور حرام مرغی کا گوشت عام سی بات ہے لیکن شہری حلال اور حرام گوشت میں امتیاز سے ناواقف ہیں، پر اب مندرجہ زیل امتیاز سے آپ یہ جان سکتے ہیں.پہلی قابل ذکر بات تو یہ کہ حرام مرغی کا گوشت قدرے نیلا ہوتا ہے جبکہ حلال کی گئی مرغی کا گوشت گلابی یا ہلکا پیلا ہو گا جس کی وجہ یہ ہے کہ اسلامی طریقے سے حلال کی گئی مرغی کا سارا خون باہر نکل جاتا ہے

اور صرف گوشت کا رنگ ہی رہ جاتا ہے.حرام مرغی یا غلط طریقے سے کٹنے والی مرغی کا خون جسم سے باہر نہیں نکل پاتا اور اندر ہی رہ جانے کی صورت میں جم جاتا ہے اور وہ خون جمنے کی صورت میں قدرتی طور پر نیلا پڑ جاتا ہے.حرام مرغیوں کیلئے بیوپاری حضرات ”ٹھنڈی مرغی یا اکھ میٹی”کی اصطلاح استعمال کرتے ہیں.اسی طرح پریشر والے گوشت کا رنگ ہلکا گلابی ہوگا، اگر پریشر نہ لگا ہو گا تو مرغی کے گوشت کا رنگ شوخ گلابی ہو گا-اسی طرح گائے کے گوشت میں پریشر والا گوشت بنانے کیلئے قصاب پانی کا پائب جانور کو ذبح کرنے کے بعد شہہ رگ میں ڈال کر پانی چھوڑتے ہیں. جس کی وجہ سے پانی پورے دباﺅ کے ساتھ ہر چھوٹی بڑی رگ میں پہنچ جاتا ہے اور یہ بھی ناجائز منافع خوری میں شمار ہوتا ہے کیونکہ اس سے گوشت کا وزن بڑھ جاتا ہے

میاں بیوی کا ایک ساتھ بستر پر سونے کی فضیلت اور اس کا ثواب شریعت کی روشنی میں جانیں

انسان اپنی زندگی میں ناجانے کتنے ہی لوگوں کے ساتھ تعلق قائم کرتا ہے بہت سارے لوگ اس کی زندگی میں آتے ہیں اور چلے جاتے ہیں ۔انسان بے شمار لوگوں کو اپنا دوست بنتا ہے ۔وہ لوگ وقت کے ساتھ اس کو چھوڑ کر چلے ہی جاتے ہیںانہیں لوگوں میں سے آنے جانے والوں میں سے انسان اپنے ہی ایک ایسے دوست کا بھی انتخاب کرتا ہے جو اس کی زندگی میں ایک مرتبہ شامل ہونے کے بعد اس سے کبھی بھی دُور نہیں جاتا جو زندگی بھر اس کا ساتھ دیتا ہےاور اس کو کبھی بھی نہیں چھوڑتا جو نکاح جیسے خوبصورت بندھن میں بندھنے کے بعد ایک دوسرے کے لیے راحت کا سامان کرتے ہیں ۔۔بلکہ دو انسانوں کے درمیان پہلے رشتہ کو قائم کرتے ہیں اور نکاح کرکے اللہ تعالی کے حکم کو مانتے ہیں

اللہ تعالی کی طرف سے انسان کے لیے یہ ایک عظیم ترین تحفہ ہے یہ ایک ایسا رشتہ ہے جس میں اللہ نے خیر ہی خیر ڈالی ہے جو ایک دوسرے کے لیے محبت ،اُلفت ،ہمددری رکھتے ہیں مگر اب افسوس کے ساتھ کہنا پڑتا ہےکہ شطیان نے اس رشتہ کو خراب کرنے میں کسی بھی حد تک جانے کی سوچی ہوئی ہے شطیان بہت سے غلط کام انسانوں سے کرتا ہے مگر اس کو خوشی نہیں محسو س ہوتی ،البتہ اگر شطیان کسی میان بیوی کے درمیان جھگڑا کرتا ہےتو اُس دن وہ بہت خوشی محسوس کرتا ہےکیونکہ وہ جانتا ہے کہ اگر یہ دونوں آپس میں لڑاتے ہیں تو دو خاندانوں کے درمیاں جھگڑا ہوگا اور جس کا آخر کار یہ نیتجہ نکلے گئے کہ وہ اپنی بیوی کو طلاق دے گیا اور کہا جاتا ہےکہ طلاق جیساالفاظ اللہ تعالی کو ناسخت پسند ہے

سلام میں خاوند بیوی کے رشتہ کو کتنی فصیلت حاصل ہے شائد بہت ہی کم لوگوں کو اس کے بارے میں بتا ہےآج ہم آپ کو بتائے گئے کے خاوند اور بیوی کا ایک ساتھ سونے کا کتنا ثواب ہے ۔خیال رہے کہ خاوند بیوی اپنے گھر کو جنت بھی بن سکتے ہیں اور دوزخ بھی ۔اکثر اوقات لوگوں کا کہنا ہے کہ عورت کا کام ہوتا ہے کہ گھرکا کام کاج کرنا ۔۔مگر یہ غلط بات ہےہمارے پیارے آقا کریم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی زندگی ایک بہترین مثال ہے اور یہ روایت عام ہے کے آپ نبی کریم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم گھر کے کاموں میں ہاتھ بٹیتے تھے مگر آج کل کےزمانے میں تو خاوند بیوی کا ایک ساتھ بیٹھا بھی مشکل ہوگیا ہے اسی وجہ سے بہت سارے گھروں میں سکون نہیں ہےبہت سارے بزرگ لوگوں سے سنا ہے کہ

میاں بیوی کا ایک ساتھ بستر پر سونے ہی اتنی فصیلت والاہوتا ہے کہ اتنا پیار سے سونے کی وجہ سے اللہ تعالی ان دنوں کو پوری رات عبادت کا ثواب دیتے ہیںیا صرف اُسی کو ہے جو مسلمان ہےایک حدیث مبارک میں اس طرح ذکر ہوا ہے کہ جب میاں بیوی ایک دوسرے کا ہاتھ محبت کے ساتھ پکڑتے ہیں تو ان کے سارے گناہ انکی انگولوں میں بہےجاتے ہیں نبی پاک نے انہوں مردوں بہترین مرد اقرر دیا ہے جو اپنی بیویاں کے لیے سب سے اچھے ہ

Leave a Comment

error: Content is protected !!